نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے بعد انگلینڈ نے بھی دورہ پاکستان منسوخ کر دیا

نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کے بعد انگلش کرکٹ بورڈ نے بھی اپنی ٹیمیں بھجوانے سے انکار کردیا۔ انگلش کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری کی جانے والی پریس ریلیز کے مطابق انگلینڈ نے مینز اور ویمنز ٹیموں کو پاکستان نہ بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

ترجمان ای سی بی کا کہنا ہے کہ فیصلہ کھلاڑیوں کی ذہنی اور جسمانی صحت کے پیش نظر کیا جارہا ہے، کھلاڑی کورونا کی وجہ سے ذہنی دباؤ کا شکار ہیں، خطے کی موجودہ صورتحال میں سفر کرواکر ان کو مزید دباؤ میں نہیں ڈال سکتے، پی سی بی کے ساتھ ٹور ممکن بنانے کیلیے مثبت پیش رفت کی تھی، سمجھ سکتے ہیں اس فیصلے سے پی سی بی کو مایوسی ہوگی، جبکہ پاکستان میں کرکٹ پر اثرات کے لیے معزرت خواہ ہیں۔

برطانوی ہائی کمشنر نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شائقین کرکٹ کی مایوسی کا احساس ہے۔ اگلے سال انگلش کرکٹ ٹیم کے مکمل دورہ کی امید ہے۔ دورہ کے لیے پی سی بی کی بھرپور محنت پر شکر گزار ہوں۔

دوسری جانب چیئرمین پی سی بی رمیز راجہ نے ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا کہ انگلینڈ کرکٹ بورڈ کے فیصلے سے شدید مایوسی ہوئی، انگلینڈ بورڈ نے اس وقت دھوکا دیا جب پاکستان کو کرکٹ کی ضرورت تھی۔ تاہم ہم اس مشکل صورتحال سے جلد نکل جائیں گے۔

رمیز راجہ کا مزید کہنا تھا کہ یہ پاکستانی ٹیم کے لیے ویک اپ کال ہے کہ دنیا کی نمبر ون ٹیم بنے، پاکستان بہترین ٹیم بن گئی تو ٹیموں کی لائن لگ جائے گی۔یاد رہے کہ انگلینڈ کی مینز اور ویمنز ٹیم کو ٹی ٹونٹی اور ون ڈے سیریز کے لیے آئندہ ماہ پاکستان کا دورہ کرنا تھا۔

دوستوں کے ساتھ شیئر کریں

عماد خٹک

عماد خٹک شعبہ ذرائع ابلاغ کے اسٹوڈنٹ ہیں۔ نیوز ویب سائٹ اور اخبارات میں رپورٹنگ کے فرائض سرانجام دے رہے ہیں، آرٹیکل رائٹنگ میں بھی دلچسپی رکھتے ہیں اردگرد کے مسائل کو قلم بند کرنے کا ہنر رکھتے ہوئے اپنے آپ کو اس شعبے سے وابستہ رکھے ہوئے ہیں۔

متعلقہ پوسٹ